Welcome to MuftiArbab.com - A Spiritual Page!
الصلوۃ معراج المؤمنین کی تحقيق

سوال: الصلوۃ معراج المؤمنین کیا یہ عبارت حدیث شریف میں ہے یا نہیں؟
بسم الله الرحمن الرحيم
الجواب وبالله التوفيق: صحیح بات یہ ہے کہ یہ حدیث نہیں ہے، بلکہ کسی بزرگ کا قول ہے؛ لہذا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف نسبت کیے بغیر یہ جملہ استعمال کیا جا سکتا ہے کہ نماز مومن کی معراج ہے؛ اس لیے کہ نماز انسان کو اللہ تعالیٰ سے ملانے کا ذریعہ ہے۔
الیواقیت الغالیۃ میں ہے:
“((الصلاۃ معراج المؤمن)) اشتهر علی ألسنة العوامّ أنّه حدیث مرفوع، و قد أوغلت في طلبه في مظانّه فلم أعرفه ولم أعثر له علی سند، و الظاهر أنّه من کلام بعض السلف.” (2/62،66)
مرقاة المفاتيح شرح مشكاة المصابيح (2/ 624):
“و لذا قيل: الصلاة معراج المؤمن.”